نشئ شوہر کا بیوی پر وحشیانہ تشدد چہرے پر سگریٹ لگاتا رہا جہیز کا قیمتی سامان گھر سےاٹھا کر بیچ کھایا

آر پی او ملتان ڈی پی او لودھراں انصاف کے تقاضے پورے کریں اور با اثر مبینہ ملزم کے خلاف کارروائی عمل میں لائیں۔
نشئ شوہر کا بیوی پر وحشیانہ تشدد چہرے پر سگریٹ لگاتا
رہا جہیز کا قیمتی سامان گھر سےاٹھا کر بیچتا رہا اور گھر سے مزید رقم لانے کا اصرار کے بعد بیوی کے انکار پر نشئہ میں دھت درندہ صفت شوہر کاشف نےشدید تشدد کا نشانہ بنایا۔
وہاڑی کے نواحی گاؤں 228 ای بی کے رہائشی محمد یوسف نے میڈیا نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ دو سال قبل اپنی بیٹی(ع) کا رشتہ مصری خاں میں غلام محمد کے بیٹے کاشف سے کیا جو بعدازاں معلوم ہوا کہ کاشف منشیات کا دھندا کرتاہے اور تاش اور میچوں پر جوا کھیلتا ہے وقوعہ سے ایک دن پہلے کاشف جوا میں بھاری رقم ہار گیا اور بیوی کو کو مزید رقم گھر سے لانے کا کہا انکار کرنے پر پر وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنایا کاشف مصری خاں کا مشہور جواری ہے منشیات کے استعمال کے ساتھ ساتھ منشیات فروشی کے مکروہ دھندے میں بھی ملوث ہے علاقے کے بااثر لوگوں اور مقامی پولیس سے گہرے تعلقات ہیں جس کی وجہ سے مقامی پولیس تھانہ صدر دنیا پور کارروائی کرنے سے گریز ہے شادی کے چند ماہ بعد ہی جب اصل صورتحال سامنے آنے لگی تو لڑکی کو خاموش رہنے کی غرض سے ڈرایا دھمکایا جانے لگا کچھ عرصہ قبل بھی لڑکی کو بری طرح سے زرکوب کیا گیا تھا بات علیحدگی تک پہنچ گئی مگر رشتہ دار بیچ میں پڑ گئے اور گارنٹی دیکر دوبارہ بچی کو سسرال لے گئے اس بار بھی پانچ دن سسرال میں نہیں گزرے تھے کہ کاشف نے وحشیانہ تشدد کا نشانہ بنا ڈالا جب ہمیں اطلاع ملی اور ہم بیٹی کے سسرال پہنچے تو ہمیں بھی سنگین نتائج کی دھمکیاں دی گئیں اور بچی کو حوالے کرنے سے بھی انکار کردیا. مجبوراً پولیس کو 15 پر کال کرکے بلایا گیا جس پر ماں بیٹا اور دیگر ملوث رشتہ دار موقع سے فرار ہوگۓ. 4 دن گزرنے کے بعد اور میڈیکل ہوجانے کے بعد بھی میڈیکل رپورٹ دینے میں ٹال مٹول اور اس بہانے سے fir کے اندراج میں بھی تاخیر برتی جارہی ہے. متاثرین مصری کوٹ، دنیا پور اور لودھراں کے درمیان 4 دن سے خوار ہورہے ہیں مگر کوئی شنوائی نہیں ہورہی محمد یوسف نے ڈی پی او لودھراں آر پی او ملتان وزیر اعلیٰ پنجاب سے انصاف کی اپیل کی ہے

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here