کھپرو شہر کی زرعی مارکیٹ میں کالے لوسن کے بیج اور گندم کے بیج میں ملاوٹ اور دونمبر بیج کی فروخت کاشت کاروں کو لاکھوں کا نقصان زرعی توسیع کھاتہ کمپنیوں کی دعوت اڑانے میں مشغول حکومت نوٹس لے

کھپرو شہر کی زرعی مارکیٹ میں کالے لوسن کے بیج اور گندم کے بیج میں ملاوٹ اور دونمبر بیج کی فروخت کاشت کاروں کو لاکھوں کا نقصان زرعی توسیع کھاتہ کمپنیوں کی دعوت اڑانے میں مشغول حکومت نوٹس لے
تفصیلات کے مطابق کھپرو محکمہ زراعت کے شعبے پیپسی سائیڈ اور زرعی مرکز کے دکانداروں کی جانب سے کاشتکاروں کو کالے لوسن میں بیپاڑی کے بیج ملاوٹ کرکے فروخت کئے جارہے ہیں جبکہ گندم کے سیزن آتے ہی مارکیٹ میں گندم کے دو نمبر بیج کی فروخت شروع ہو گئی کھپرو کے کاشتکاروں محمد حسن  محمد شر ارباب پھوڑ اور دانش نے میڈیا کو بتایا کہ ہم کھپرو کے زرعی شاپ سے کالے لوسن کے بیج لئے تھے جس میں آدھے سے زیادہ بیپاڑی گھاس کے بیج نکلے ہمارے کھیتوں پر لگے لاکھوں روپے ضائع ہو گئے جبکہ گندم کا بھی غیر معیاری بیج فروخت کیا جارہا ہے انھوں نے زرعی توسیع کھاتے پر الزام لگاتے ہوئے کہا کہ کھپرو ایگریکلچر کھاتہ زرعی پیپسی سائیڈ دکانداروں سے رشوت کے عیوض کھلی چھوٹ دیدی ہے اور زرعی دوائیں کمپنیوں کی دعوتیں اور تحفے تحائف لینے میں مصروف ہیں اور آبادگار بھلے تباہ ہو جائے انھوں نے حکومت سندھ سے ملاوٹ شدہ بیج کی فروخت پر پابندی عائد کر ے اور ایکشن لے

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here