پاکستان کی گرتی ہوئی معیشت نے ویزا قوانین پر بہت بُرا اثر ڈال دیا

ترکی سمیت یورپی یونین نے پاکستانیوں کیلئے ویزا قوانین مزید سخت کر دئیے۔ پاکستان کی گرتی ہوئی معیشت اور غیر یقینی صورتحال کے پیش نظر ترکی سمیت یورپی یونین کے ممبر ممالک نے پاکستانیوں کے لیے ویزا قوانین میں مزید سختی لاتے ہوئے ویزا جاری کرنے کی تعداد میں کمی کر دی ہے۔
یورپی یونین کے خارجہ امور کے ماہر ایک آفیسر کا کہنا ہے کہ نئی پالیسی کے تحت پاکستان میں بے یقینی کی صورتحال ہے اور عوام بھی موجودہ حکومت کی پالیسیوں سے خوش نہیں جس کے بعد معاشی مسائل کا شکار افراد پاکستان سے یورپ کی جانب رخ کر رہے ہیں اور ماہ جون سے اگست تک تقریبا اکہتر ہزار ویزا درخواستیں موصول ہوئی ہیں اور ہر طرح کی مکمل چھان بین کے بعد تقریبا انیس ہزار پاکستانیوں کو مختلف کیٹگری کے ویزا جات جاری کیے گئے ہیں اور نو ہزار درخواستیں التوا کا شکار ہیں سب سے کم ویزا جات پرتگال، یونان، سوئیٹزرلینڈ نے جاری کیے جبکہ سب سے زیادہ ویزہ جات اٹلی، اسپین، ہالینڈ، فرانس اور جرمنی نے جاری کیے۔

یاد رہے کہ سیزنل کام کاج کے ویزہ جات بھی یورپی یونین کے ممالک پاکستانیوں کو نہیں جاری کر رہے ان کی تعداد بھی محدود کر دی گئی ہے، کام کاج کے لیے سیزنل ویزہ جات سب سے زیادہ نیپال، بنگلہ دیش اور بھارت کے لوگوں کو جاری کیے جا رہے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here