راولپنڈی میں موٹر سائیکل سواروں کی بڑی تعداد ایندھن کے حصول کے لیے لمبی قطاروں میں کھڑی ہے۔  تصویر: اے پی پی
راولپنڈی میں موٹر سائیکل سواروں کی بڑی تعداد ایندھن کے حصول کے لیے لمبی قطاروں میں کھڑی ہے۔ تصویر: اے پی پی

وزارت توانائی (پیٹرولیم ڈویژن) نے اعلان کیا ہے کہ ملک بھر میں کل (جمعرات) کو پٹرول پمپس کھلے رہیں گے۔

پاکستان پیٹرولیم ڈیلرز ایسوسی ایشن (پی پی ڈی اے) نے پہلے دن میں اعلان کیا تھا کہ وہ کل سے ملک گیر ہڑتال پر جائیں گے تاکہ وہ “کم منافع بخش مارجن” کے خلاف اپنا احتجاج درج کرائیں۔

پیٹرولیم ڈویژن کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا ہے کہ پی پی ڈی اے کی جانب سے پیٹرول پمپ مالکان کے لیے مارجن میں اضافے کا مطالبہ اقتصادی رابطہ کمیٹی (ای سی سی) کو بھیج دیا گیا ہے۔

پیٹرولیم ڈویژن کے ترجمان نے کہا کہ لوگوں کو پریشان ہونے کی ضرورت نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ وزارت ای سی سی سے منظور شدہ آئل مارکیٹنگ کمپنیوں اور ڈیلرز کے مارجن میں معقول اضافہ کے لیے کوششیں کر رہی ہے، انہوں نے مزید کہا کہ اس حوالے سے وفاقی کابینہ کا فیصلہ 10 روز میں متوقع ہے۔

ترجمان نے کہا کہ پی ایس او، شیل اور ٹوٹل سمیت تمام کمپنیوں کے پیٹرول پمپس کل ملک بھر میں کھلے رہیں گے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ملک بھر میں تیل کی بلاتعطل فراہمی کو یقینی بنانے کے لیے آئل ٹینکرز روانہ کر دیے گئے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ تیل کے شعبے کی بہت سی ایسوسی ایشنز نے وزارت کی طرف سے کی جانے والی کوششوں پر اطمینان کا اظہار کیا ہے۔

دریں اثناء پیٹرول پمپس کی بندش کا نوٹس لیتے ہوئے آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی (اوگرا) نے پیٹرولیم مارکیٹنگ کمپنیوں کو پیٹرولیم اشیا کی بلاتعطل فراہمی کو یقینی بنانے کی ہدایت کردی۔

ترجمان اوگرا کا کہنا ہے کہ بعض عناصر پٹرولیم مصنوعات کی سپلائی میں خلل ڈالنے کی کوشش کر رہے ہیں تاہم اوگرا کی انفورسمنٹ ٹیمیں فیلڈ میں صورتحال کی نگرانی کریں گی۔

آئل ریگولیٹر نے کہا کہ سپلائی میں رکاوٹیں ڈالنے والے عناصر کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔



Source link

Leave a Reply