لیپ ٹاپ کے خریداروں کےلئے انتباہ

“لیپ ٹاپ سیلرز سے ہوشیار باش جو کہ اکثر ناجائز کاروبار کے ماسٹر ہوتے ہیں غیر معیاری لیپ ٹاپس لیکر مارکیٹس میں پھرتے ہیں اور دکان دکان جاکر یہ بیچتے ہیں۔ یہ لیپ ٹاپ اکثر ناکارہ ہوتے ہیں اور سیلز مینز چیک بھی نہیں کرواتے، اور کپیوٹر کو نا جاننے والے جو اکثر “پھنےخان” بننے کے چکر میں ہوتے ہیں ٹھگے جاتے ہیں
گلیوں میں‌پھرنے والے لیپ ٹاپ سیلرزنے ایک ایپل کے لیپ ٹاپ کا 1 لاکھ روپیہ مانگا ۔ دکاندار نے کم ریٹ لگایا اور مزاق کرنے لگے ۔ لیپ ٹاپ سیلرز نے اشتعال دلاتے ہوئے کہا کہ تم مرد ہو تو مجھے 50000 روپیہ لاکر دکھا دو میں تمھیں سارے لیپ ٹاپ دیدونگا اس نے جیب سے 45000 نکال کر میز پر رکھ دیے ۔ لیپ ٹاپ پہلے ہی میز پر تھے لیپ ٹاپ سیلرز نے جیب میں پیسے ڈالے اور ساتھی لیپ ٹاپ سیلرزنے اس کو برا بھلا کہنے لگ گئے کہ اتنے مہنگے لیپ ٹاپ اتنے سستے دے رہے ہو پاگل ہو۔ لیکن پیسے اٹھانے والے لیپ ٹاپ سیلر نے کہا کہ جب زبان ہو گیا تو بس بات ختم اور باہر کھسک گیا۔اور باقی بھی نکل گئے۔، جبکہ تمام لیپ ٹاپس 20 ہزار کے بھی نہیں ہیں۔ اس طرح کے واقعات پہلے بھی جاننے والوں کے ساتھ ہو چکے ہیں۔

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here